بانی: عبداللہ بٹ      ایڈیٹرانچیف : عاقل جمال بٹ

بانی: عبداللہ بٹ

ایڈیٹرانچیف : عاقل جمال بٹ

وزیر اعظم نے بلوچستان کے زمینداروں کے مطالبات مان لئے

 

وزیر اعلی بلوچستان میر سرفراز بگٹی نےکہاکہ ہم وزیر اعظم کے انتہائی مشکور ہیں جنہوں نے دیرینہ مسئلہ حل کیا مسئلے کا حل بھی نکالا جائے گا، بلوچستان میں بجلی لوڈشیڈنگ سب سے بڑا مسئلہ ہے بجلی بحران کے حل کے لئے 50 ارب روپے مختص کئے گئے ہیں۔

وزیر اعلی بلوچستان میر سرفراز بگٹی کی چیف سیکرٹری کے ہمراہ بلوچستان اسمبلی میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ہمارے زمیندار صوبائی اسمبلی کے باہر پر امن احتجاج پر ہیں مزاکرات کے بعد کمیٹی قائم کی گئی، زمینداروں کا وفد ملنے آیا زمینداروں کا مطالبہ جائز ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم زمینداروں کے مسائل لے کر وزیر اعظم کے پاس گئےاور فارمولہ طے کیا تھا کہ زرعی ٹیوب ویل شمسی توانائی پر منتقل کیا جائے گا وزیر اعظم نے بڑے دل سے بلوچستان کے لوگوں کا مسئلہ سناشمسی توانائی پر منتقلی کے لئے 50 ارب روپے درکار ہیں40 ارب روپے وفاق دے گا 10 ارب صوبائی حکومت دے گی۔

وزیر اعلی بلوچستان نے کہا کہ ایک ماہ میں زرعی ٹیوب ویل شمسی توانائی پر منتقل کرنے کا کام ہوگاایک ماہ تک کیسکو زمینداروں کو روزانہ چھ گھنٹے بجلی فراہم کرے گا۔ ہم وزیر اعظم کے انتہائی مشکور ہیں جنہوں نے دیرینہ مسئلہ حل کیا مسئلے کا حل بھی نکالا جائے گا۔

ایک سوال کے جواب میں میر سرفراز بگٹی کا مزید کہنا تھا کہ ہم کل وفد کے ہمراہ چمن جائیں گے اور بات چیت سے مسئلہ حل کریں گے بلوچستان میں امن و امان کی صورتحال مثالی نہیں ہماری بہادر افواج نے گزشتہ روز ژوب میں آپریشن کیا۔دہشت گردوں کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے میں پاک فوج کے میجر شہید ہوئےہمیں اپنی افواج پر فخر ہے۔

بعدازاں وزیر اعلیٰ بلوچستان میر سرفراز بگٹی نے دھرنے میں جا کر شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آپ کے لوگوں کے مطالبات تسلیم ہو گئے اور اب دھرنے کا کوئی جواز نہیں بنتا پریس کانفرنس میں وزراء اور زمیندار ایکشن کمیٹی کے ممبران بھی موجود تھے۔